39

وفاقی حکومت اپنی نا اہلی چھپانے کے لۓ سندھ حکومت پر تنقید کر رھی ھے


خیرپور (بیوروچیف) پاکستان پیپلزپارٹی لیڈیز ونگ ضلع صدر زینب بلوچ ایڈووکیٹ نے کہا ہے کہ وفاقی حکومت کرونا وائرس میں عوام کی مدد کرنے کے بجائے سندھ حکومت کے خلاف بیان بازیوں میں مصروف ہے۔ بجائے اس کے وفاقی حکومت سندھ حکومت کی اس کارکردگی کو تسلیم کرتی جو اس نے کرونا وائرس کے ابتدائی مراحل میں اٹھائے۔ وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے پارٹی صدر بلاول بھٹو زرداری کے احکامات پر کرونا وائرس کی ابتدائی شکایات موصول ہو نے کے بعد جو اقدامات اٹھائے وہ قابل ستائش تھے۔ پہلے وفاقی حکومت سندھ حکومت کے ابتدائی مراحل میں لاک ڈاؤن کے فیصلے پر تنقید کرتی رہی اور بعد ازاں اسے خود بھی ایسا فیصلہ کرنا پڑا جس کے بعد یہ ثابت ہوا کہ عمران خان ماسوائے یو ٹرن کے ملک چلانے کی صلاحیت نہیں رکھتے۔ وزیراعلیٰ سندھ اگر وقتی طور پر دوٹوک فیصلہ نہ کرتے تو بڑی تعدادمیں قیمتی انسانی جانیں ضائع ہو جاتیں۔وزیراعلیٰ سندھ کے اقدامات کے بڑی حد تک معاملات کو کنڑول کیے رکھا۔عوام کو کرونا وائرس سے احتیاط برتنی چاہیے تاکہ وہ خود بھی اور دوسروں کو بھی بچا سکیں۔ صوبائی حکومت کو کرونا وائرس میں نرمی کے اقدام مجبوری کے تحت اٹھانے پڑے ہیں اور اب عوام کا فرض بنتا ہے کہ وہ بھی اس میں اپنی بھرپور ذمہ داری نبھائیں۔ بلاول بھٹو زرداری حقیقی معنوں میں محترمہ بے نظیر بھٹو کی تصویر ہیں اور ان کے اندر محترمہ شہید بے نظیر بھٹو کی جھلک نظر آتی ہے۔ محترمہ زینب بلوچ ایڈووکیٹ نے مزید کہا کہ ملک میں کرونہ کیسسز ختم نہیں ہو رہے اور وزیراعظم نے لاک ڈاؤن ختم کرنے کا اعلان کیا ہے۔وفاقی حکومت نے کرونہ وائرس پر کوئی کام نہیں کیا ہے۔وفاقی حکومت کے سب وزیر اور خود وزیراعظم صرف سندھ حکومت کے خلاف بیان بازی کرنے میں مصروف عمل ہیں۔کرونہ وائرس تک لاک ڈاؤن ختم نہیں کیا جائے وائرس تیزی سے پہیل رہا ہے۔عمران خان نے پہلے لاک ڈاؤن کی نا نا کرتے ہوئے لاک ڈاؤن کا اعلان کیا اب لاک ڈاؤن ختم کرنے کے پہیچے پڑے ہیں۔حکومت کرونہ وائرس پر عملی کام کر رہی ہے سندھ اندر سخت لاک ڈاؤن چل رہا ہے تاکہ شہریوں کی زندگیاں بچا جا سکیں۔کٹھ پتلی وزیراعظم سکینڈلز میں پاکستان کی سکینڈل کوئن کو مات دے گئے، عمران خان کے آئے دن نئے مالی سکینڈل بے نقاب ہو رہے ہیں۔نیازی بھی سکینڈل کوئن کی طرح اپنے کرپشن سکینڈلز پر اتراتا پھرتا ہے۔دنیا کا پہلا حکمران ہے جو اپنا ایک سکینڈل دبانے کیلئے اپنا ہی ایک اور سکینڈل سامنے لے آتا ہے۔آٹے، چینی کے بعد اب اس جعلی خان کا ادویات کا سکینڈل سامنے آ گیا ہے۔سلیکٹڈ وزیراعظم اپنے ہی سکینڈلز کی اپنے ماتحتوں سے تحقیقات کا کہہ کر مٹی ڈال دیتا ہے۔نیازی کا یہ کھیل اب زیادہ دیر نہیں چلے گا۔بنی گالہ کے نیازی بابا چالیس چوروں کو ایک ایک پائی کا حساب دینا پڑے گا

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں